یاسمین راشد کا الیکشن کمیشن کے خلاف سپریم کورٹ جانے کا اعلان


تحریک انصاف کی رہنما یاسمین راشد نے الیکشن کمیشن کے خلاف سپریم کورٹ جانے کا اعلان کیا ہے۔

لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے یاسمین راشد نے کہا کہ پہلے ہی کہا تھا کہ این اے 120 کا ضمنی انتخاب جیتوں یا ہاروں لیکن الیکشن کمیشن کے خلاف سپریم کورٹ جاؤں گی۔

یاسمین راشد نے کہا کہ انتخابی مہم کے دوران سرکاری وسائل کا استعمال کیا گیا اور حلقے میں ایک ارب روپے کے ترقیاتی کام کروائے گئے جو کہ انتخابات سے قبل دھاندلی تھی۔

 

انہوں نے کہا کہ ضابطہ اخلاق کے مطابق ہمیں پہلے الیکشن کمیشن سے ہی رجوع کرنا ہے اور آج ہم نے الیکشن کمیشن میں درخواست دائر کر دی ہے۔

تحریک انصاف کی رہنما نے کہا کہ ہمارے بار بار کہنے کے باوجود 29 ہزار ووٹوں کی تصدیق نہیں ہوئی اور ان ووٹوں کی تصدیق تک رزلٹ جاری نہیں ہونے دیں گے۔

خیال رہے کہ سابق وزیراعظم نواز شریف کی نااہلی کے بعد خالی ہونے والی لاہور کی نشست این اے 120 پر گزشتہ روز ضمنی انتخاب ہوا جس میں مسلم لیگ (ن) کی امیدوار اور نواز شریف کی اہلیہ کلثوم نواز نے کامیابی حاصل کی ہے۔

Advertisement



loading...
loading...

ڈیلی نیوز پاکستان

ایک ایسی ویب سائٹ جہاں آپکو ہر اھم خبر بروقت ملے خبر سیاست سے متعلق ہو یا معیشت سے ملکی ہو یا غیر ملکی یا بین الاقوامی معیشت کے عنوان سے ہو یا معاشرت کے کھیل کی خبریں ہوں یا عوامی مسائل کی الجھنیں ہم آپکے سامنے پیش کرتے ہیں ہر ضروری اور غیر معمولی نیوز اپڈیٹس تجزیے تبصرے مکالمے مباحثے بلاگز مضامین مقالات بروقت برموقع برمحل
Top