روزانہ 600 کیلوریزکے استعمال سے ٹائپ ٹو ذیابیطس کا خاتمہ ممکن !

روزانہ 600 کیلوریزکے استعمال سے ٹائپ ٹو ذیابیطس کا خاتمہ ممکن !
ٹائپ ٹو ذیابیطس میں لبلبہ انسولین کی مناسب مقدار پیدا نہیں کرپاتا اور یوں خون میں شکر کی مقدار بڑھنے لگتی ہے۔ فوٹو: فائل

لندن: برطانوی ماہری نے کہا ہے کہ اگر ذیابیطس کے مریض صرف 8 ہفتوں تک روزانہ 600 کیلوریز والی غذا کھائیں تو ان کی ٹائپ ٹو ذیابیطس بہت حد تک کم ہوکر خاتمےتک پہنچ سکتی ہے۔
نیوکاسل یونیورسٹی کے سائنسدانوں نے کہا ہے کہ ٹائپ ٹو ذیابیطس میں لبلبہ انسولین کی مناسب مقدار پیدا نہیں کرپاتا اور یوں خون میں شکر کی مقدار بڑھنے لگتی ہے اور دیگر تمام جسمانی اعضا کو متاثر کرتی ہے۔

ہم جانتے ہیں کہ اضافی کیلوریز خصوصاً جگر اور لبلبلے پر چکنائی کی وجہ بنتے ہیں اور جگر پر چربی جمع ہونے کا مریض ’فیٹی لیور ڈیزیز‘ کہلاتا ہے جس میں جگر ضرورت سے ذیادہ گلوکوز بنانا شروع کردیتا ہے۔ پھر ذیادہ کیلوریز کھانے سے اضافی چربی لبلبے پر جمع ہونا شروع ہوجاتی ہے اور یوں انسولین بنانے کی صلاحیت شدید متاثر ہوتی ہے۔

Advertisement



loading...
loading...

ڈیلی نیوز پاکستان

ایک ایسی ویب سائٹ جہاں آپکو ہر اھم خبر بروقت ملے خبر سیاست سے متعلق ہو یا معیشت سے ملکی ہو یا غیر ملکی یا بین الاقوامی معیشت کے عنوان سے ہو یا معاشرت کے کھیل کی خبریں ہوں یا عوامی مسائل کی الجھنیں ہم آپکے سامنے پیش کرتے ہیں ہر ضروری اور غیر معمولی نیوز اپڈیٹس تجزیے تبصرے مکالمے مباحثے بلاگز مضامین مقالات بروقت برموقع برمحل
Top